’آپ کل جتنے مرضی چھوٹے کپڑے پہن کر آئیں ،حکومت کا نمائندہ ہوتے ہوئے آپ کو سپورٹ کروں گا‘ غریدہ فاروقی سے بحث کے دوران شہباز گل کا بیان

’آپ کل جتنے مرضی چھوٹے کپڑے پہن کر آئیں ،حکومت کا نمائندہ ہوتے ہوئے آپ کو سپورٹ کروں گا‘ غریدہ فاروقی سے بحث کے دوران شہباز گل کا بیان


’آپ کل جتنے مرضی چھوٹے کپڑے پہن کر آئیں ،حکومت کا نمائندہ ہوتے ہوئے آپ کو …

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن ) تعلیمی اداروں میں خواتین کے لیے جینز پہننے پر پابندی کے حوالے سے وزیراعظم کے مشیر شہباز گل اور اینکرپرسن غریدہ فاروقی کے درمیان بحث چھڑ گئی ۔

نجی نیوز چینل کے پروگرام میں شہباز گل نے کہا کہ ہو سکتا ہے کہ میں اس بات کو سپورٹ نہ کروں،میری اپنی بیٹی جو بھی کپڑے پہننا چاہے مجھے اس میں کوئی مسئلہ نہیں لیکن مالا کنڈ کے لوگوں نے اپنے حالات دیکھنے ہیں ،انہوں نے ڈی ایچ اے لاہور کے حالات دیکھ کر فیصلہ نہیں کرنا ، ہو سکتا ہے کہ اگر وہاں پر ڈریس کوڈ لاگو نہ کریں تو لوگ اپنی بچیوں کو سکول بھیجنا بند کردیں ۔ شہباز گل نے مثال دیتے ہوئے کہا کہ کیا پوری دنیا میں پولیوکے قطرے پلانے کے لیے کیا مسجدوں کا تعاون لیا جاتا ہے ؟،ہمارے یہاں یہ تعاون لیا جاتا ہے کیونکہ ہمارے اپنے اندرونی مسائل ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ میں آپ کو حکومت کا نمائندہ ہو کر کہتا ہوں کہ آپ جتنے مرضی چھوٹے کپڑے پہنیں ،میں آپ کو سپورٹ کروں گا ،کل آپ جتنے مرضی چھوٹے کپڑے پہن کر آئیں ،میں وعدہ کرتا ہوں کہ آپ کو سپورٹ کروں گا ،ہمیں اس سے کوئی مسئلہ نہیں ہے ۔غریدہ فاروقی نے جواب دیا کہ ان کی بحث خواتین کے کم کپڑوں تک ہی ہے ،ان کے لیے خواتین کے حقوق کی بحث لباس سے شروع ہوتی ہے ، یہ مرد کی ذہنیت ہے ۔اس پر شہباز گل نے وضاحت دیتے ہوئے کہا کہ کم یا زیادہ کپڑے پہننے کی بات آپ نے کی ۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس



Leave a Reply

%d bloggers like this: